Urdu

شہد سے جلد کو خوبصورت بنانے کے بہترین طریقے

شہد کی افادیت سے انکار نہیں کیا جاسکتا اس کو کھانے سے جہاں ہر بیماری کے لیے شفا ہے وہاں اسے جلد پر لگانے سے بیشمار فائدے حاصل ہوتے ہیں۔ جلد کی خوبصورتی کو برقرار رکھنے میں شہد اہم کردار ادا کرتا ہے کیونکہ شہد میں قدرت نے ایسی خصوصیات رکھی ہیں کہ وہ ہر قسم کے بیکٹیریا کو زائل کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔شہد کھانسی، بند ناک کو کھولنے اور خراب گلے کے لئے بھی بے حد مفید ہے، اسے کھانے سے نہ صرف بیماریاں دور ہوتی ہیں بلکہ چہرے پر لگانے سے بے رونق اور خشک جلد بھی تازہ دم ہو جاتی ہے، اس کے علاوہ چہرے پر خالص شہد کا لیپ دینے سے خراب جلد بھی نرم ہو جاتی ہے۔

Honey

شہد کا چہرے کیلئے ماسک
ایسی خواتین جن کی جلد خشک ہوتی ہے، انہیں چاہیے کہ ایک چمچ شہد میں ایک چمچ دودھ ایک چمچ بادام روغن ملا کر ماسک بنا لیں اور اس کو دس منٹ چہرے پر لگائیں اس سے جلد تازہ دم اور نرم و ملائم ہو جائے گی اگر بہت تیز میک اپ سے آپ کا چیرہ خراب ہو گیا ہو تو شہد اس کے لئے بھی مفید ثابت ہوتا ہے روازنہ دس منٹ خالی شہد کا ماسک لگانے سے بھی جلد ٹھیک ہو جاتی ہے۔

شہد کا مساج
اگر آپ کے ہاتھ کھردرے ہیں تو روزانہ شہد کا مساج کرنے سے ہاتھ نرم ہو جائیں گے، دو چائے کے چمچ کھیرے کا رس اور ایک ایک چمچ دودھ اور شہد کا لیکر مکس کر کے ماسک بنا لیں، دس منٹ لگانے کے بعد ٹھنڈے پانی سے منہ دھو لیں، اس کے علاوہ شہد بادام روغن اور انڈا لے کر ماسک بنا لیں اور اسے چہرے پر لگائیں، آئلی جلد کے لئے یہ ایک بہترین ماسک ہے،شہد سے جلد کو خوبصورت بنانے کے چند ایسے ٹوٹکے درج ذیل ہیں جنہیں جلد کو خوبصورت بنانے کے لیے صدیوں سے استعمال کیا جا رہا ہے۔

Wild Honey

چہرے کی جھریوں کے لیے
چہرے کی جھریاں ختم کرنے کے لیے ایک چمچ شہد میں ایک چمچ لیموں کا رس شامل کر کے مکسچر بنا لیں اور پھر اسے چہرے پر مل لیں اور پندرا منٹ تک لگا رہنے دیں، پندرا منٹ کے بعد چہرے کو پانی سے دھو دیں اور اس عمل کو جھریاں ختم ہونے تک روزانہ جاری رکھیں، یہ چہرے کی جھریاں ختم کرنے کا بہترین ٹوٹکا ہے، جو بازار کی مہنگی کریموں سے بہت سستا ہے،یہ مرہم صدیوں سے استعمال کیا جا رہا ہے اور اس سے انتہائی مُفید نتائج حاصل ہوتے ہیں۔پیاز کا پانی دو چمچ لے کر ایک چمچ شہد میں مکس کر لیں اور اسے چہرے پر لگائیں اور 15 منٹ بعد چہرہ نیم گرم پانی سے دھو کر آئینہ دیکھیں آپکا دل خوش ہوجائے گا۔

نوٹ: یہ مضمون عام معلومات کیلئے ہیں، قارئین اس حوالے سے اپنے معالج سے بھی مشورہ کر لیں۔

شہد سے متعلق اصلی اور خالص مصنوعات خریدنے کیلئے کلک کریں

Related Posts